پشاور زلمی نے فروغ کرکٹ کیلئے منفرد گیم ڈویلپمنٹ پروگرام متعارف کرا دیا

پشاور:عمران رشید خان: پشاور زلمی نے فروغ کرکٹ کیلئے

Imran Rasheed

پاکستان سپر لیگ (پی ایس ایل) فرنچائز پشاور زلمی نے گیم ڈویلپمنٹ پروگرام، اوور سیز
پاکستانی بچوں کی کرکٹ ٹیم بنانے اور ستمبر میں کون بنے گا خیبر پختونخوا کرکٹ چیمپئن
شپ منعقد کرانے کا اعلان کر دیا-

اوورسیز ٹرائلز کا آغاز آئندہ ماہ برطانیہ سے کیا جائیگا، ایم اکرم

پشاور زلمی نے فروغ کرکٹ کیلئے منفرد گیم ڈویلپمنٹ پروگرام متعارف کرا دیا
پشاورزلمی کے ہیڈ کوچ اور ڈائریکٹر محمد اکرم کپتان وہاب ریاض، کامران اکمل اور
سابق ٹیسٹ کرکٹر ارشد خان کے ہمراہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے

پشاورزلمی کے ہیڈ کوچ اور ڈائریکٹر محمد اکرم نے کپتان وہاب ریاض، کامران اکمل اور
سابق ٹیسٹ کرکٹر ارشد خان کے ہمراہ پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا آئندہ ماہ جون میں
برطانیہ سے ٹرائلز کا آغاز کیا جائیگا جس کے بعد سویڈن، جرمنی اور اٹلی میں ٹرائلز لئے
جائیں گے، امریکہ میں بھی ٹرائلز لینے کا ارادہ ہے، دو روزہ اوپن ٹرائلز میں اوور سیز
پاکستانی ٹیم کیلئے کھلاڑی تلاش کئے جائیں گے، جس کے بعد کون بنے گا خیبر پختونخوا
کرکٹ چیمپئن شپ ہوکرائی جائیگی جس میں ایک اوور سیز ٹیم اور صوبے کے تمام اضلاع
کی ٹیمیں حصہ لیں گی، اگست تک بیرون ملک ٹرائلز مکمل کئے جائیں گے پھر خیبر پختونخوا
میں ٹرائلز کا آغاز کیا جائیگا، ٹرائلز میں منتخب کھلاڑیوں کو کون بنے گا خیبر پختونخوا چیمپئن
شپ میں کھلایا جائیگا۔

پی ایس ایل میچز پشاور میں کرانے کیلئے کوشاں ہیں

محمد اکرم نے مزید کہا کہ گیم ڈویلپمنٹ پروگرام کے تحت پچز بنائیں گے جبکہ انڈر 16 تا
انڈر 19 تک 100 سے زائد کھلاڑیوں کو کٹس دیں گے، باصلاحیت کھلاڑیوں کیلئے ماہانہ
وظائف پروگرام شروع کر رہے ہیں تاکہ ان کا ٹیلنٹ ضائع نہ ہو اور وہ کھیل پر توجہ دے
سکیں، بچوں کیلئے زیادہ سے زیادہ مواقع پیدا کرنے کی کوشش کر رہے ہیں، پشاور میں پی
ایس ایل میچ کرانے کا وعدہ کیا گیا تھا، لیکن میچ نہ ہو سکا، پشاور زلمی کی بھرپور خواہش
ہے کہ پی ایس ایل کے میچ پشاور میں کرائے جائیں تاکہ ٹیم اپنے ریجن میں کھیلے، پی سی
بی نے اب اگلے سال پشاور میں میچ رکھنے کا وعدہ کیا ہے، اس سلسلے میں پی سی بی کو
اپیل کریں گے کہ خیبر پختونخوا میں میچ رکھا جائے، اس ریجن کے لوگوں نے بہت مشکلات
دیکھی ہیں ان کے چہروں پر خوشی دیکھنا چاہتے ہیں۔

ڈیرن سیمی اب بھی پشاور زلمی کا حصہ ہیں

پشاور زلمی سمیت دیگر فرنچائز مختلف ایج گروپ کی ٹیمیں بنانے اور کھلاڑیوں کی تیاری
کیلئے پی سی بی سے بات چیت کر رہی ہیں، پی سی بی ایک نئی لیگ کرانے جا رہا ہے، خواہش
ہے پشاور زلمی کی ٹیم لیگ میں کھیلے، پی سی بی کیساتھ مل کر ٹیموں کی دیکھ بھال کرنا
چاہتے ہیں۔ ڈیرن سیمی اب بھی پشاور زلمی کا حصہ ہیں، پچھلے سیزن میں وہ ذاتی مصروفیات
کی وجہ سے شرکت نہیں کر سکے تھے، آئندہ سیزن میں ڈیرن سیمی پھر نظر آئیں گے۔ پشاور
میں پشاور زلمی دفتر بنانے کیلئے ارباب نیاز سٹیڈیم کی تکمیل کے منتظر ہیں اور اس ضمن میں
پی سی بی سے بات چیت جاری ہے۔ خیبر پختونخوا کے کھلاڑی باصلاحیت ہیں اور ہر فرنچائز
انہیں خرید رہی ہے۔

بنیادی سہولیات کی فراہمی سے صوبہ میں کھلاڑیوں کی شرح 27 فیصد ہو چکی

پچھلے سال گیم ڈویلپمنٹ پروگرام کے تحت کھلاڑیوں کو بنیادی سہولیات فراہم کیں، 112 انڈر
19 کھلاڑیوں کو کٹس دیں، 110 پچز بنائیں، نیٹس کا بندوبست کیا، وزیرستان کے کھلاڑیوں کیلئے
بھی سامان بھیجا، وزیرستان سے تین باصلاحیت کھلاڑی ملے ہیں، انہی بنیادی سہولیات کی وجہ
سے ڈومیسٹک کرکٹ میں خیبر پختونخوا کے کھلاڑیوں کی شرح 8 فیصد سے 27 ہو گئی ہے۔
پشاور زلمی کی جانب سے سہولیات دینے کے باعث اب نوجوان کھلاڑی ڈومیسٹک کرکٹ کھیل
رہے ہیں۔

قارئین ===> ہماری کاوش اچھی لگے تو شیئر، اپ ڈیٹ رہنے کیلئے (== فالو == ) کریں،
مزید بہتری کیلئے اپنی قیمتی آرا سے بھی ضرور نوازیں،شکریہ
جتن نیوز اردو انتظامیہ

پشاور زلمی نے فروغ کرکٹ کیلئے ، پشاور زلمی نے فروغ کرکٹ کیلئے ، پشاور زلمی نے فروغ کرکٹ کیلئے

===> دنیا بھر سے کھیل و کھلاڑیوں کی خبریں (== پڑھیں ==)

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

%d bloggers like this: