پشاور: بیٹیوں کو قتل کرنیکے بعد خاتون کی خودکشی یا تہرا قتل..؟

کرائمز نیوز/ پشاور: بچیوں کو قتل کرنیکے بعد

خیبرپختونخوا کےدارالحکومت پشاور کے پوش علاقے حیات آباد میں پولیس نے خاتون سمیت دو بچیوں کی لاشیں برآمد کیں ہیں

تینوں کی فوت اسلحہ آتشیں سے فائرنگ لگنے کے نتیجے میں ہوئی ہے

مبینہ طور پر ماں نے فائرنگ کرکے اپنی دو بیٹیوں کو قتل کرنیکے بعد اسی آلہ قتل سے خودکشی کرلی

پولیس نے حیات آباد فیز 6 میں مقتولہ کے چچا کے گھر کے کمرے یعنی جائے وقوعہ کا معائنہ کیا

اور واردات حوالے سےشواہد اکٹھے کئے تینوں لاشوں کو اپنی تحویل میں لینے کیبعد پوسٹ مارٹم کیلئےمردہ خانہ روانہ کردیا۔

واقعہ کی تفصیلات کچھ یوں ہے کہ

مقتولہ کے چچا ارشد علاؤالدین نے پولیس بیان میں بتایا ہے کہ مقتولہ عنبر ناصر اسکی بھتیجی ہے

جبکہ واہ کینٹ میں رہائش پزیر ہے دو سال قبل اس نے اپنے شوہر سے علیحدگی اختیار کرلی تھی

جسکے بعد سے مقتولہ اپنی آبائی جائیداد میں حصہ کا مطالبہ کرتی اور اس سلسلے میں لڑائی جھگڑا کرتی تھی

تاہم گزشتہ روز بھی جائیداد کے تنازعے پر تلخ کلامی ہوئی اور مقتولہ نےاپنے چچا کی آنکھ میں مرچیں ڈالیں

اوراپنی دونوں بیٹیوں عیشال اورمائرہ کو اپنے ساتھ کمرے میں لے گئی اگلے ہی لمحے فائرنگ کی آواز سنائی دی

جاکر دیکھا تو نتیجتاً بھتیجی نے اسلحہ آتشیں سے فائرنگ کرکے اپنی دونوں بیٹیوں کو قتل کرنیکے بعد خود اپنی زندگی کا بھی چراغ گل کردیا

اس سلسلے میں پولیس نے مقتولہ کے چچا کو شامل تفتیش کرلیا ہے پولیس ذرائع کا کہنا ہے کہ مزکورہ واقعہ کی بارے میں کوئی پختہ رائے قائم کرنا قبل از وقت ہوگا تفتیش کے بعد ہی معلوم ہوپائے گا کہ واقعہ خود کشی ہے یا تہرے قتل کی واردات۔۔؟

قارئین ===> ہماری کاوش اچھی لگے تو شیئر، اپ ڈیٹ رہنے کیلئے (== فالو == ) کریں، مزید بہتری کیلئے اپنی قیمتی آرا سے بھی ضرور نوازیں،شکریہ جتن نیوز اردو انتظامیہ

Imran Rasheed

عمران رشید خان صوبہ خیبر پختونخوا کے سینئر صحافی اور سٹوری رائٹر/تجزیہ کار ہیں۔ کرائمز ، تحقیقاتی رپورٹنگ ، افغان امور اور سماجی مسائل پر کافی عبور رکھتے ہیں ، اس وقت جے ٹی این پی کے اردو کیساتھ بحیثیت بیورو چیف خیبر پختونخوا فرائض انجام دے رہے ہیں ۔ ادارہ

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

%d bloggers like this: