لندن کا معروف گھڑیال بگ بین پانچ سال بعد دوبارہ بج اٹھا

لندن (جے ٹی این پی کے) لندن کا معروف گھڑیال بگ بین

لندن کا معروف گھڑیال بگ بین پانچ سال بعد دوبارہ بج اٹھا۔لندن کے اس مشہور گھڑیال کی بحالی کا کام پانچ سال تک جاری رہا اور اب اتوار کے روز وہ باضابطہ طور پر دوبارہ چالو کر دیاگیا۔

ایک بار پھر برطانوی پارلیمنٹ میں سب سے اوپر والی آئیکونک گھڑی اس انداز میں بجی جیسے پہلے بجتی تھی۔

گھڑیال کی بحالی کے دوران اس کے ایک ہزار ٹکڑوں کی پیچیدہ صفائی کی گئی۔

اگست 2017 میں بگ بین کی آخری 12 گھنٹیاں اور اس کی چار دیگر چھوٹی گھنٹیاں سننے کے لیے ایک ہزار سے زیادہ لوگ پارلیمنٹ کے سامنے جمع ہوئے تھے۔

اس موقع پر وہاں موجود کچھ لوگ آبدیدہ بھی ہوگئے تھے،

وہ سمجھتے تھے کہ انہوں نے اپنے شہر کی ایک یادگار کو کھو دیا ۔

اس ٹاور کا نام 2012 میں ملکہ الزبتھ دوم کی ڈائمنڈ جوبلی کے موقع پر تبدیل کر کے الزبتھ ٹاور رکھا گیا تھا۔

اس سے قبل اس ٹاور کو "کلاک ٹاور” کہا جاتا تھا۔

یہ ٹاور 1840 کی دہائی میں تعمیر کیا گیا تھا۔یہ ٹاور کبھی ویسٹ منسٹر کی سب سے نمایاں عمارتوں میں سے ایک تھا،

تاہم اب اس علاقے میں اور بھی اونچی اور زیادہ مسلط عمارتیں بن گئی ہیں۔

ویسٹ ورتھ نے کہا ایک وقت تھا کہ خاموش راتوں میں 15 میل دور گھڑی بجتی تھی۔

بحالی کے دوران گھنٹیوں کے کئی حصوں کو صاف کیا گیا، جب کہ انہیں دوبارہ پینٹ بھی کیا گیا،

لیکن گھنٹیاں خود نہیں توڑی گئیں۔

"بگ بین” گھڑی کو منتقل کرنے کے لیے ٹاور کی بنیاد کو تباہ کرنا ضروری تھا۔

بحالی میں سب سے مشکل کام 1859 سے شروع ہونے والی 11.5 ٹن وزنی گھڑی کے میکانزم کو ہٹانا تھا تاکہ اس کے حصوں کو صاف کیا جا سکے۔

28 بلب اب 4 ڈائلوں کو روشن کرتے ہیں جس میں سبز اور سفید رنگ کے شیڈز وکٹورین دور میں استعمال کیے جانے والے گیس لیمپ کی طرح کے ہوتے ہیں۔

پارلیمنٹ کی تاریخ بتانے کے لیے گھنٹیوں کے اوپر ایک اور سفید روشنی کا بلب لگایا گیا تھا۔

بحالی کے کام سے پہلے گھڑی کے آپریٹرز ٹیلی فون کا استعمال کرتے ہوئے اس کا وقت چیک کرتے تھے۔

آج وہ اسے نیشنل فزکس لیبارٹری کے تیار کردہ جی پی ایس سسٹم کے ذریعے کنٹرول کر سکتے ہیں۔

تاہم گھڑی کو ترتیب دینے کا طریقہ اب بھی بہت روایتی ہے۔ پرانے سکوں کا استعمال وزن میں

اضافے کے لیے یا گھڑی کے بڑے چشموں کو ہٹانے کے لیے کیا جاتا ہے۔

اس طریقہ سے گھڑی میں ایک سیکنڈ کو شامل یا ضائع کیا جا سکتا ہے۔

لندن کا معروف گھڑیال بگ بین

قارئین ===> ہماری کاوش اچھی لگے تو شیئر، اپ ڈیٹ رہنے کیلئے (== فالو == ) کریں،

یہ بھی پڑھیں : ہیکرز کرپٹو کمپنی ‘ہارمونی’ سے 10 کروڑ ڈالر لے اڑے

admin

پاکستان سمیت دنیا بھر میں ہونے والے اہم حالات و واقعات اور دیگر معلومات سے آگاہی کا پلیٹ فارم

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

%d bloggers like this: