فیس بک کی پاکستانیوں سے ماہانہ وصولی کا انکشاف

لاہور (جے ٹی این پی کے) فیس بک پاکستانیوں سے ماہانہ وصولی

 

امریکی اخبار نے فیس بک کا چہرہ بے نقاب کرتے ہوئے انکشاف کیا ہے کہ سماجی رابطے کی ویب

سائٹ مفت انٹرنیٹ کے پیسے لے رہی ہے اور پاکستانیوں سے 33 کروڑ روپے ماہانہ وصولی کی جاتی ہ

ے۔

 

امریکی اخبار وال سٹریٹ جرنل کی رپورٹ کے مطابق مارک زکر برگ کی زیر ملکیتی سماجی رابطے کی ویب

سائٹ فیس بک پاکستانیوں سے سروس استعمال کرنے کے ماہانہ کروڑوں روپے وصول کررہی ہے۔

 

رپورٹ کے مطابق فیس بک کے سافٹ ویئر میں خرابی کی وجہ سے سیلولر نیٹ ورک صارفین سے ڈیٹا

چاجرز لیے جا رہے ہیں اور اندرونی دستاویزات میں ویب سائٹ کے ملازمین تسلیم کرتے ہیں کہ یہ ایک

مسئلہ ہے۔

یہ بھی پڑھیں:انسٹاگرام نے صارفین کیلئے ٹک ٹاک انداز کی ریمکس ویڈیو بنانا ممکن بنا دیا

امریکی اخبار کے مطابق سماجی رابطے کی ویب سائٹ کے ایک ملازم نے اکتوبر میں کمپنی کو لکھا کہ لوگوں س

ے ایسی سروسز کے پیسے لینا جو دراصل مفت ہیں ہمارے شفافیت کے اصول کی خلاف ورزی ہے۔

 

فری بیسکس کے نام سے جانی جانے والی سروس میٹا کنیکٹیویٹی کے ذریعے فراہم کی جاتی ہے اور خیال

کیا جاتا ہے کہ یہ صارفین کو مواصلاتی ٹولز، صحت کی معلومات، تعلیمی وسائل اور دیگر کم بینڈوتھ خدمات تک

مفت رسائی فراہم کرتی ہے۔

یہ سروس 2013 سے دستیاب ہے اور اکتوبر 2021تک دنیا بھر میں اس سے 30 کروڑ سے زیادہ لوگوں ن

ے استفادہ کیا ہے۔

قارئین : ہماری کاوش پسند آئے تو شیئر ، اپڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

فیس بک پاکستانیوں سے ماہانہ وصولی

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

%d bloggers like this: