شاہنواز کا اقبال جرم ، مقتولہ سارہ پر غیرملکی ایجنٹ، کسی سے افیئرز کا بھی شبہ

اسلام آباد(جے ٹی این پی کے نیوز) شاہنواز کا اقبال جرم

سینئر صحافی ایاز امیر کے بیٹے اور اپنی اہلیہ کے ملزم قاتل شاہنواز امیر نے مقتولہ پر کسی اور ملک کے ایجنٹ اور کسی اور کیساتھ تعلقات کا شبہ ظاہر کرتے ہوئے پولیس کو ابتدائی بیان ریکارڈ کرا دیا۔

ملزم قاتل شاہنواز نے کہا کہ سارہ نے مجھے کسی سے افیئر نہ ہونے پر مطمئن کر دیا تھا لیکن مجھے یوں محسوس ہوتا تھا وہ کسی ملک کی ایجنٹ ہے اور مجھے مارنا چاہتی ہے۔

میری تیسری اہلیہ تھی، گذشتہ رات میرا گلہ دبانا چاہا،

ذرائع کے مطابق ملزم نے بتایا سارہ سے سوشل میڈیا پر رابطہ ہوا تھا اور 3 ماہ پہلے شادی ہوئی،

وہ میری تیسری بیوی تھی، پہلی بیوی کا نام بھی سارہ تھا۔

ملزم نے مزید بتایا کہ سارہ گزشتہ روز ہی دبئی سے اسلام آباد آئی تھی،

قاتل ملزم کے بیان کے مطابق گزشتہ رات کو بھی سارہ نے میرا گلا پکڑا، میں نے سارہ کو پیچھے دھکیلا،

صبح ساڑھے 9 بجے سارہ میرے قریب آئی اور میری گردن پکڑ لی،

مجھے یوں محسوس ہوا میری گردن ٹوٹ جائیگی اور میں مرجاوں گا،

میں نے اسے دھکا دیا جس سے وہ نیچے گر گئی۔

ملزم نے بتای کہ سارہ نے گرنے کے بعد اٹھ کر مجھ پر حملہ کر دیا،

قریب ہی میرا ورزش والا ڈم بلز پڑا تھا جو میں نے اس کے سر پر دے مارا،

میرے وار کرنے پر کمرے میں خون جمع ہو گیا اور میں گھبرا گیا،

یہ بھی پڑھیں : سینئر صحافی ایاز امیرکے بیٹے شاہنواز کے ہاتھوں بیوی کا قتل

میں نے خون صاف کرنے کیلئے سارہ کو باتھ ٹب میں ڈال دیا اور پانی کھول دیا تاکہ خون بہہ جائے۔

ملزم کا پولیس کو بیان میں مزید بتایا کہ میں نے باتھ ٹب کی تصویر کھینچ کر اپنے والد ایاز امیر کو بھی بھیج دی اور انہیں سارا واقعہ فون کر کے بتایا۔

انہوں نے اسلام آباد پولیس کے سینیئر افسران کو فون پر واقعے کی اطلاع دی۔

بعد ازاں پولیس نے قاتل ملزم کو گرفتار کرکے مقدمہ درج کر لیا، قتل کا واقعہ اسلام آباد کے علاقے چک شہزاد میں سینیئر صحافی ایاز امیر کے گھر پیش آیا۔

قارئین ===> ہماری کاوش اچھی لگے تو شیئر، اپ ڈیٹ رہنے کیلئے (== فالو == ) کریں،
مزید بہتری کیلئے اپنی قیمتی آرا سے بھی ضرور نوازیں،شکریہ
جتن نیوز اردو انتظامیہ

شاہنواز کا اقبال جرم ، شاہنواز کا اقبال جرم ، شاہنواز کا اقبال جرم ،

= پڑھیں = پاکستان بھر سے مزید اہم اور تازہ ترین خبریں

A.R.Haider

شعبہ صحافت سے عرصہ 25 سال سے وابستہ ہیں، متعدد قومی اخبارات سے مسلک رہے ہیں، اور جرنل ٹیلی نیٹ ورک کی اردو سروس جتن نیوز اردو کی ٹیم کے بھی اہم رکن ہیں۔ جتن انتظامیہ

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

%d bloggers like this: