سکیورٹی ادارے کا فراہم کردہ گارڈ بنک کی رقم لیکر فرار، بینکار گرفتار

ریاض (جے ٹی این پی کے) سکیورٹی ادارے کا فراہم کردہ گارڈ

ماضی میں جرائم اورہیرا پھیروں کا لمبا تجربہ رکھنے والے فرد کو بنک نے خزانے کی رکھولی کے لیے گارڈ بھرتی کر لیا ۔

مجرمانہ ریکارڈ ار جرم کا وسیع تجربہ رکھنے والا سکیورٹی پر مامور یہ گارڈ بنک کے 180000 یورو لے کر فرار ہو گیا۔

جبکہ اس کی جگہ پر بنکار اور بنکار کا ڈرائیور دھر لیے گئے ہیں۔

معلوم ہوا ہے کہ تیونس کے ایک بنک نے ایک سکیورٹی کی ذمہ دار کمپنی سے ایک ایسے گارڈ کو اپنے سکیورٹی امور کی دیکھ بھال کے لیے ہائر کرلیا جو جرائم پیشہ تھا اور اس کا جرائم کا ریکارڈ طویل تھا۔

بنک نے اس کے باوجود سکیورٹی ادارے پر بھروسہ کرتے ہوئے اس کے نامزد کردہ گارڈ کی خدمات قبول کرلیں۔

ایک روز بنک کے ایک اہلکار کو بنک سے ایک دوسری برانچ تک بنک کی رقم لے کر جانا تھا،

اس ‘تجربہ کار’ سکیورٹی گارڈ کو بھی کرنسی لے کر جانے والی گاڑی کے ساتھ روانہ کر دیا گیا۔

راستے میں بنکار کو اس کے گھر سے پلمبر کا فون آیا تو اس نے ڈرائیور کو حکم دیا کہ

گاڑی کا رخ اس کے گھر کی طرف موڑ لے وہ چند منٹ میں پلمبر کو ہدایات دے کر واپس آجائے گا۔

جب بنکر چند منٹ کے لیے اپنے گھرکے سامنے کے لیے گاڑی سے اترا تو گارڈ اور

ڈرائیور گاڑی میں موجود رہے۔

مگر بنکار کے جانے کے بعد سکیورٹی گارڈ نے ڈرائیور کو ایک پرچی دی اور

18000 یورو کی رقم لے کر ایسا گیا کہ پھر واپس ہی نہیں آیا۔

اس دوران بنکر اور ڈرائیور دونوں کو گرفتار کر لیا گیا ہے۔

جبکہ گارڈ کا کچھ پتہ نہیں چل سکا ، نہ ہی بنک کی رقم کا کچھ پتہ چل سکاہے۔

سکیورٹی ادارے کا فراہم کردہ گارڈ

قارئین ===> ہماری کاوش اچھی لگے تو شیئر، اپ ڈیٹ رہنے کیلئے (== فالو == ) کریں،

یہ بھی پڑھیں : ہیکرز کرپٹو کمپنی ‘ہارمونی’ سے 10 کروڑ ڈالر لے اڑے

admin

پاکستان سمیت دنیا بھر میں ہونے والے اہم حالات و واقعات اور دیگر معلومات سے آگاہی کا پلیٹ فارم

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

%d bloggers like this: