سوئمنگ کی دنیا میں سبزہلالی پرچم کو شناخت دینا عزم ہے، کوچ مبین احمد

خصوصی گفتگو/ سوئمنگ کی دنیا میں سبزہلالی پرچم

جسمانی و ذہنی صحت کےحوالے سے کھیلوں کی اہمیت مسلمہ ہے ، لیکن ماضی کی نسبت عہد حاضر میں کئی کھیلوں نے ایک پیشے کی صورت اختیار کر لی ہے،
 جن میں کرکٹ،سکواش، ٹینس ،اتھلیٹکس،ہاکی، فٹ بال،سوئمنگ اور شامل ہیں جن کے بین الاقوامی لیول کے مقابلے ہوتے ۔
ان کھیلوں میں سکواش،فٹ بال،والی بال ،کر کٹ ،اتھلیٹکس اورہاکی،کبڈی اوردیگر ایسے کھیل ہیں، جن میں پاکستانی کھلاڑیوں نے شاندار پرفارمنس کے بدولت سبزہلالی پرچم کو سربلند رکھاہواہے۔

دیگر خبریں معروف سپورٹس رپورٹرز کے تجزیئے پڑھیں مزید کیلئے آخر میں لنک موجود ہے

نصابی و صحت مندانہ سرگرمیاں ایک ساتھ ۔۔

ایشیا کپ کے فائنل میں شکست کا ذمہ دار کون ۔ ۔ ۔؟ ایشیا کپ کے فائنل میں شکست کا ذمہ دار کون ۔ ۔ ۔؟

شائقین فٹبال کیلیے قطر میں نیا ہوٹل تیاری کے آخری مراحل میں

 امپائر اسد رؤف لاہور میں انتقال کر گئے

پاکستان کبڈی فیڈریشن کا جنرل کونسل اجلاس آج لاہور میں ہو گاپاکستان کبڈی فیڈریشن کا جنرل کونسل اجلاس آج لاہور میں ہو گا

پاکستانی تن ساز کی بھارتی کھلاڑی کو ایشین باڈی بلڈنگ چمپیئن شپ میں شکست پاکستانی تن ساز کی بھارتی کھلاڑی کو ایشین باڈی بلڈنگ چمپیئن شپ میں شکست

عظمیٰ بخاری کا فخرزمان کیلئے بڑا مطالبہ، ثناء میر بھی کرکٹر کی معترف عظمیٰ بخاری کا فخرزمان کیلئے بڑا مطالبہ، ثناء میر بھی کرکٹر کی معترف


ان کھیلوں میں ایک کھیل سوئمنگ بھی ہے۔
پاکستان سوئمنگ کی قومی اورصوبائی سطح کی تنظیمیں اورخیبر پختونخوا محکمہ کھیل کے حکام اس کھیل میں گراس روٹس لیول پر بہترین ٹیلنٹ تیا ر کرکے سامنے لانے کیلئے سرتوڑ کوششیں کررہے ہیں۔
 ملک میں سوئمنگ کی ترقی کیلئے پاکستان سوئمنگ فیڈریشن کے زیر اہتمام پاکستان سمیت دنیاکے مختلف ممالک میں انٹر نیشنل اور ایشین سوئمنگ فیڈریشن کی نگرانی میں کوچنگ ور یفریز کے باقاعدہ کورس ہوتے ہیں،
جبکہ دیگر ممالک کی سوئمنگ فیڈریشنز کی طرح پاکستان سوئمنگ فیڈریشن بھی باقاعدگی سے کوچنگ کورس کاانعقاد کرکے کوالیفائڈ کوچزسامنے لایا جا تا ہے،
 مختلف شہروں میں صوبائی سوئمنگ ایسوسی ایشنزاور حکومتی اداروں کی نگرانی انہی کوچز کے ذریعے سوئمنگ پولز میں جونیئرز کھلاڑیوں کو ٹریننگ دی جاتی ہے ،
جس کا مقصد قومی اور بین الاقوامی سطح کے مقابلوں کیلئے تیارکیا جاناہے ،
 سوئمنگ کھلاڑیوں پر اگر توجہ دی جائے توکوئی شک نہیں وہ قومی لیول کیساتھ انٹر نیشنل سطح پر پاکستان کا نام روشن کرسکیں گے ۔

کوالیفائڈ کوچز میں ایک نام مبین احمد کا ہے


انہی کوالیفائڈکوچزمیں ایک نام مبین احمد کا بھی ہے جن کا تعلق خیبر پختونخواکے دارالحکومت پشاور سے ہے،  
مبین احمد کی خصوصیت یہ ہے کہ وہ خود بھی ایک باصلاحیت تیراک ہیں اور نیشنل لیول کے برائونزمیڈل بھی جیت چکے ہیں ،
وہ تیراکی سے متعلق بھی بہت علم رکھتے ہیں، انہیں تیراکی اور خاص کر کم عمر تیرکوںکو تیراکی سیکھانے کا ہنر آتا ہے ۔
پاکستان سوئمنگ فیڈریشن سمیت سوئمنگ کے شعبے میں مبین احمد کو ایک تجربہ کاروبہترین کوچ کے طور پر جانے اور پہچانے جاتے ہیں۔  
انہوں نے 22 جون 2009 کو اسلام آبا د میں سوئمنگ کے انٹرنیشنل فیڈریشن کی تنظیم فیناکے زیر اہتمام منعقدہ آفیشلزکورس میں نمایاں پوزیشن حاصل کی،  
2017 اور اسکے بعد 2019 کے دوران ایشین سوئمنگ فیڈریشن کے زیر اہتمام ہونیوالے مختلف ٹیکنیکل کورس میں پاکستان سوئمنگ فیڈریشن کی جانب سے حصہ لیا۔  
انہوں نے متعددکورس کرائے ہیں جن کی ایک لمبی فہرست ہے اور کوالیفائڈ ٹیکنیکل آفیشل کوچ کے طور پر سامنے آئے ہیں،

مبین احمد قابلیت و تجربہ کی بدولت قومی سوئمنگ ٹیم کے کوچ



مبین احمد کی اس قابلیت اور تجربے کو دیکھتے ہوئے پاکستان سوئمنگ فیڈریشن نے قومی سوئمنگ ٹیم کاکوچ تعینات کیا،  
جبکہ اس کے علاوہ سپورٹس ڈائریکٹریٹ خیبر پختونخوااور صوبائی سوئمنگ ایسوسی ایشن  
کی زیر سرپرستی ہر سال کی طرح 2019 میں بھی انڈر 14،16،17 کٹیگری کے
 بچوں کیلئے مبین احمدکی نگرانی تربیتی کیمپ لگایاجس کے بہترین نتائج نکلے ۔
اس کیمپ سے صوبے کی سطح پر بہترین سوئمرزسامنے آئے جنہوں نے پرقومی سطح کے  
مقابلوں میں شاندرافارمنس دی اور انشا اللہ مستقبل میں بھی قومی اور بین الاقوامی
 مقابلوں میں اپنا لوہا منوائیں گے۔

مبین احمد پشاور سپورٹس کمپلیکس عادل خان سوئمنگ پول میں کھلاڑیوں کو تربیت دیتے ہیں



مبین احمد پشاور سپورٹس کمپلیکس پشاور کے عادل خان سوئمنگ پول میں ہرسال منعقدہ ٹریننگ کیمپ میں کھلاڑیوں کو تربیت دیتے رہے ہیں،
یہی وجہ ہے کہ صوبائی سپورٹس ڈائریکٹریٹ نے انہیں بطور کوچ تعینات کیااور کئی سال سے عادل خان سوئمنگ پول میں خدمات انجام دے رہے ہیں۔
جرنل ٹیلی نیٹ ورک کی ’’جتن اردونیوز سروس سے خصوصی ملاقات میں سوئمنگ کوچ مبین احمد نے بتایا  
کہ پاکستان میں سوئمنگ کا مستقبل روشن ہے بلکہ خیبر پختونخوا میں سوئمنگ کے حوالے سے کافی ٹیلنٹ  
موجودہے ہماری بھر پور کوشش ہے اس ٹیلنٹ کو مزید پالش کرکے سامنے لائیں ۔

خیبر پختونخوا حکومت اور سپورٹس ڈائریکٹوریٹ دیگر کھیلوں کیساتھ سوئمنگ کے فروغ کیلئے کوشاں



ایک سوال کے جواب میں مبین احمد نے کہا جس علاقے اور شہر میں کھیل کے میدان اور سامان کی
 سہولت ہوتی ہے وہ شہر اور علاقہ دوسرے علاقوں سے زیادہ اہمیت رکھتے ہیں،
انہوں نے کہا صوبہ بھر میں خیبر پختونخواحکومت بالخصوص سپورٹس ڈائر یکٹوریٹ دیگر کھیلوں  
کیساتھ ساتھ سوئمنگ کے فروغ کیلئے بھی بہتر اقدامات اٹھارہا ہے جس کی وجہ سے انشااللہ  
مستقبل قریب میں اچھے نتائج برآمد ہوں گے

سوئمنگ کی دنیا میں سبزہلالی پرچم کو شناخت دنیا عزم ہے، مبین احمد

سویمنگ کوچ مبین احمد

مبین احمد نے کہا انہوں نے اپنی ساری زندگی اسی کھیل میں گزاری ہے اور وہ پاکستان  
کو بہترین کھلاڑی دیکرسوئمنگ کی دنیا میں سبزہلالی پرچم کو شناخت دیناچاہتے ہیں۔
دوسری جانب اس حوالے سے کھیلوں کے حلقوں کا کہناہے کہ صوبائی سپورٹس ڈائریکٹریٹ  
کے حکام کومبین احمدکے تجربے اور مہارت سے بھر پور فائدہ اٹھاکر انہیں مستقبل طور پر  
سوئمنگ کوچ تعینات کرنا چاہیے ، تاکہ اس طرح نچلی سطح پر بہترین کھلاڑی پیداکی جاسکے۔

خبروں/ بیانات/ اشتہارات کیلئے ھمارے بیورو چیف خیبرپختونخوا سے وٹس ایپ پر رابطہ کریں شکریہ

قارئین ===> ہماری کاوش اچھی لگے تو شیئر، اپ ڈیٹ رہنے کیلئے (== فالو == ) کریں، مزید بہتری کیلئے اپنی قیمتی آرا سے بھی ضرور نوازیں،شکریہ جتن نیوز اردو انتظامیہ

===> دنیا بھر سے کھیل و کھلاڑیوں کی خبریں (== پڑھیں ==)

Ghani Ur Rehman

غنی الرحمان صوبہ خیبر پختونخوا کے سینئر صحافی اور سپورٹس رپورٹر ہیں۔ کھیلوں سے متعلق کافی عبور رکھتے ہیں ، اس وقت جے ٹی این پی کے اردو کیساتھ بحیثیت سپورٹس رپورٹر خیبر پختونخوا فرائض انجام دے رہے ہیں ۔ ادارہ

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

%d bloggers like this: