سبی میلے کی اختتامی تقریب کے بعد خودکش حملہ ، 5 سیکورٹی اہلکار شہید

کوئٹہ (جے ٹی این پی کے) سبی میلے اختتامی تقریب خودکش حملہ

بلوچستان کے علاقے سبی میں خودکش حملہ پانچ سیکورٹی اہلکار شہید سیکورٹی اہلکاروں سمیت افراد زخمی ہوگئے.

دھماکے سے کچھ دیر قبل ہی صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی نے سبی میلے کی اختتامی تقریب میں شرکت کی تھی،

سی ٹی ڈی حکام کے مطابق منگل کو بلوچستان کے علاقے سبی میں جیل روڈ پر بلدیہ ریسٹ ہاؤس کے قریب سبی میلے کی اختتامی تقریب کے ختم ہونے کے کچھ دیر بعد خود کش حملہ آور نے سیکورٹی اہلکاروں کے قریب جاکر خود کو دھماکے سے اڑا دیا،

یہ بھی پڑھیں : پھولوں کا شہر پھر لہو لہو، شیعہ جامع مسجد پر خودکش حملے میں 55 نمازی شہید

ایم ایس سول ہسپتال سبی ڈاکٹر غلام سرور ہاشمی کے مطابق دھماکے میں پانچ سیکورٹی اہلکار

حوالدار لطیف، نائیک وحید، سپاہی جلیل، سپاہی آفتاب،سپاہی حبیب اﷲ شہید ہوگئے.

جبکہ سیکورٹی اہلکاروں سمیت 19افراد انسپکٹر عبدالرشید، سب انسپکٹر برکت علی،سب انسپکٹر

نصراﷲ، صوبیدار سیف اﷲ، سپاہی سمیع اﷲ،سپاہی منور حسین،سپاہی صداقت علی،سپاہی

نذاکت علی،سپاہی رحیم،کانسٹیبل ایم حنیف،اے ایس آئی پہلوان،کانسٹیبل عمران،کانسٹیبل

سبطین،سپاہی ہدایت، سپاہی منور،راہگیر سلیم ، رنجن خان،عبدالحمید ولد غازی و دیگر زخمی

ہوگئے.

سیکورٹی حکام کے مطابق سبی میلے کی اختتامی تقریب کے بعد دھماکہ ہوا.

تقریب کے مہمان خصوصی صدرمملکت ڈاکٹرعارف علوی تھے.

جبکہ تقریب میں گورنر بلوچستان ، صوبائی وزراء ،ارکان اسمبلی و دیگر اعلیٰ حکام بھی شریک تھے.

شرکاء کے جانے کے چند منٹ بعد دھماکہ ہوا،

پولیس حکام کے مطابق دھماکے کی اطلاع ملتے ہی پولیس اور قانون نافذ کرنے والے ادارے جائے وقوعہ پر پہنچ گئے اور جائے وقوعہ کو گھیرے میں لے لیکر شواہد اکھٹے کر لئے گئے ،

وزیراعلیٰ بلوچستان میر عبدالقدوس بزنجو کی ہدایت پر حکومت بلوچستان کا ہیلی کاپٹر سبی روانہ کیا گیا.

جہاں سے سبی بم دھماکے کے 4شدید زخمیوں کو کوئٹہ منتقل کیا گیا.

وزیراعلیٰ کی ہدایت پر ٹراما سینٹر سول اسپتال کوئٹہ میں زخمیوں کے علاج معالجہ کی تیار ی مکمل کرتے ہوئے ڈاکٹر اور طبی عملہ طلب کرلیا گیا۔

سبی میلے اختتامی تقریب خودکش حملہ

 

قارئین : ہماری کاوش پسند آئے تو شیئر ، اپڈیٹ رہنے کیلئے فالو کریں

 

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

%d bloggers like this: