بھارت، بیوی نے شوہر کی لاش کومہ میں سمجھ کر 18ماہ تک گھر میں رکھ لی

نئی دہلی (جے ٹی این پی کے) بھارت بیوی نے شوہر کی لاش

بھارت میں اہلخانہ نے اپنے ایک فرد کی لاش کومہ میں سمجھ کر 18ماہ تک گھر میں ہی رکھ لی۔

بھارتی میڈیا کے مطابق کانپور پولیس کا کہنا ہے کہ مرنے والے شخص کی موت کا سرٹیفکیٹ پرائیویٹ ہسپتال نے 22اپریل 2021 کو جاری کیا جس میں موت کی وجہ دل اور سانس کی بیماری بتائی گئی۔

حکام کا کہنا ہے کہ مرنے والا شخص انکم ٹیکس ڈپارٹمنٹ میں ملازمت کرتا تھا،

اسکی بیوی کی ذہنی حالت درست نہیں لگتی۔ وہ ہر صبح لاش پر گنگاجل کا چھڑکائو کرتی تھی،

اس امید میں سے کہ اس کا شوہر ایک دن کومہ سے باہر آجائے گا۔

یہ بھی پڑھیں : بھارتی مسلمانوں پر ہندوؤں کے مظالم

چیف میڈیکل آفیسر کا کہنا ہے کہ مرنے والے شخص وملیش ڈکشٹ کے اہلخانہ اس کی آخری

رسومات کی ادائیگی سے ہچکچا رہے تھے کیونکہ انہیں لگتا تھا کہ وہ کومہ میں ہے۔

ڈاکٹر نے مزید بتایا کہ پنشن کا معاملہ سامنے آنے کے بعد جب پولیس اور مجسٹریٹ وملیش کے گھر پہنچے تو اس کے گھر والوں نے تب بھی اصرار کیا کہ وہ زندہ ہے اور کومہ میں ہے۔

پولیس کا کہنا ہے کہ لاش کی حالت انتہائی خراب ہوچکی تھی۔

بھارت بیوی نے شوہر کی لاش

قارئین ===> ہماری کاوش اچھی لگے تو شیئر، اپ ڈیٹ رہنے کیلئے (== فالو == ) کریں،

admin

پاکستان سمیت دنیا بھر میں ہونے والے اہم حالات و واقعات اور دیگر معلومات سے آگاہی کا پلیٹ فارم

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

%d bloggers like this: