امریکی‘سکھز فارجسٹس’کا خالصتان ریفرنڈم کی حمایت کرنے پر زور، لندن میں سکھ فریڈم ریلی

Imran Rasheed
عمران رشید خان

نیویارک/لندن/پشاور : مانیٹرنگ رپورٹ :امریکی‘سکھز فارجسٹس’

امریکہ اور لندن میں سکھ تنظیموں کی بھارتی جارحیت کی مذمت اور علیحدگی حوالے سے سکھ برادری کو خالصتان ریفرنڈم کی حمایت کرنے کا پیغام دیا امریکہ میں قائم سکھ تنظیم ”سکھز فار جسٹس “نے جو بھارتی پنجاب کے سکھوں کے لیے علیحدہ وطن خالصتان کی حمایت کرتی ہے ،

بھارت میں سکھوں کے گوردواروں پر4جولائی 1955سے شروع ہونے والے حملے ہمیشہ ریاستی سرپرستی میں ہوتے رہے ہیں

کابل میںکچھ غیر ریاستی عناصرکی طرف سے گردوارے پر دہشت گرد حملے کی مذمت کرتے ہوئے سکھ برادری پر زور دیا ہے کہ وہ 26 جنوری 2023کو بھارت میں ہونے والے خالصتان ریفرنڈم کی حمایت کرے۔کشمیر میڈیا سروس کے مطابق سکھز فار جسٹس کے جنرل کونسل گورپتونت سنگھ پنن نے اپنے ایک آڈیو ویڈیو پیغام میں اس بات کو اجاگرکیا کہ بھارت میں سکھوں کے گوردواروں پر4جولائی 1955سے شروع ہونے والے حملے ہمیشہ ریاستی سرپرستی میں ہوتے رہے ہیں۔

بھارت سے آزاد ہو کر رہنا چاہتے ہیں، سکھ تنظیم

انہوں نے کہا کہ ایک بار جب سکھوں کا خالصتان بن جائے گا ، سکھوں کے خلاف غیر ریاستی اور ریاستی دہشت گردی میں ملوث تمام افراد کو بین الاقوامی قوانین کے تحت جوابدہ بنایا جائے گا۔انہوں نے کہاکہ اب وقت آگیا ہے جب شرومنی گوردوارہ پربندھک کمیٹی(ایس جی پی سی)اور دہلی سکھ گوردوارہ مینجمنٹ کمیٹی(ڈی ایس جی ایم سی) جیسی تمام سکھ تنظیمیں مودی حکومت سے مدد کی التجا کرنے کے بجائے بھارت میں خالصتان ریفرنڈم کے لیے 26 جنوری کی ووٹنگ کی کھلی حمایت اور تشہیر کریں۔

سکھ دربار صاحب پر بھارت کے حملے کو کبھی نہیں بھولیں گے،فیڈریشن آف سکھ آرگنائزیشن

لندن میں نکالی گئی سکھ فریڈم ریلی کے شرکا نے کہا ہے کہ وہ بھارت سے آزاد ہو کر امن کے ساتھ رہنا چاہتے ہیں۔میڈیا رپورٹس کے مطابق سکھوں کے مقدس مقام دربار صاحب پر بھارتی حملے کے 38 برس مکمل ہوگئے، جس کی یاد میں ریلی نکالی گئی۔فیڈریشن آف سکھ آرگنائزیشن نے بھارت کے خلاف سینٹرل لندن میں فریڈم ریلی نکالی، جس میں لندن سمیت دیگر شہروں سے آئے ہزاروں افراد نے شرکت کی۔

ہائیڈ پارک کے قریب ویلنگٹن آرچ سے ریلی کا آغاز کیا

ریلی کے شرکاء بکنگھم پیلس کے سامنے سے ہوتے ہوئے ٹریفلگر اسکوائر پہنچے۔اس موقع پر شرکا نے کہا کہ سکھ دربار صاحب پر حملے کو کبھی نہیں بھولیں گے۔ان کا کہنا تھا کہ بھارت نے 1984 میں سکھوں کا بے دردی سے قتل عام کیا، سکھ آج تک انصاف کے منتظر ہیں۔

قارئین ===> ہماری کاوش اچھی لگے تو شیئر، اپ ڈیٹ رہنے کیلئے (== فالو == ) کریں، مزید بہتری کیلئے اپنی قیمتی آرا سے بھی ضرور نوازیں،شکریہ جتن نیوز اردو انتظامیہ

امریکی‘سکھز فارجسٹس’

Imran Rasheed

عمران رشید خان صوبہ خیبر پختونخوا کے سینئر صحافی اور سٹوری رائٹر/تجزیہ کار ہیں۔ کرائمز ، تحقیقاتی رپورٹنگ ، افغان امور اور سماجی مسائل پر کافی عبور رکھتے ہیں ، اس وقت جے ٹی این پی کے اردو کیساتھ بحیثیت بیورو چیف خیبر پختونخوا فرائض انجام دے رہے ہیں ۔ ادارہ

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

%d bloggers like this: